نیک نے نیک اور بد نے بد جانا مجھے

کالج میں میرا ایک استاد تھا، ہر دفعہ کلاس میں میرے ساتھ “سٹیروٹیپیکل” لطیفے مارتا تھا، کبھی میری داڑھی پر کبھی مسلمانی پر وغیرہ وغیرہ، میں اسکو ہنس کر ٹال دیتا تھا، ویسے اسکو لطیفے مارنے کی بڑی عادت تھی ہر ایک کے ساتھ مارتا تھا، اور کھل کر گندے لطیفے بھی مارتا تھا ایک...

مکمل تحریر پڑھیں

سلام مائی

ثانیہ نے اس دن میرے ساتھ بڑے زور دار طریقے سے لڑائی کی تھی ، بس میں نے امی سے بات کرنے کے بعد فون بند کیا تو اسنے اپنی پلیٹ سے چمچ رکھ کر میری طرف غصے والی نظروں سے دیکھا اور یوں گویا ہوئی ، ” تم مجحے جیلسی کا احساس دینا چاہتے...

مکمل تحریر پڑھیں

نتیجہ :گھر داماد

اس نے مجھے کہا تھا کہ اگر تم اب بھی ہاں کر دو تو میں اپنے گھر والوں سے بات کروں گی۔ تو تو نے ہاں کیوں نی کی ؟ میں نے تجھے کہا تھا کہ تو بکواسی ہے تو نے اس وقت بھی ضرور اپنا کوئی فلسفہ جھاڑ دیا ہو گا ۔ نہیں یار...

مکمل تحریر پڑھیں

مس اس نے تو تیاری بھی نہیں کی تھی

  پرائمری سکول میں سالانہ فنکشن ہونا تھا بچوں کو انعام شنام ملنے تھے، استاد صیب نے کہہ دیا کہ تم تقریر کرو گے۔ میں نے بھی امی کو کہہ دیا کہ ایک اچھی سی تقریر لکھ کر دیں میں نے فنکشن میں کرنی ہے ، امی نے بھی زور دار قسم کی تقریر لکھ...

مکمل تحریر پڑھیں

اچھائی کی کچھائی

ایک دفعہ کا ذکر ہے کہ ایک خاتونہ نے مجھ سے پوچھا تھا کہ تم اتنے اچھے کیوں ہو ، تو میں نے کہا تھا کہ اسکی وجہ یہ ہے کہ میں بیوقوف ہوں ، انہوں نے مجھ سے زیادہ بیوقوفی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پوچھا کہ تم بیوقوف کیوں ہو، ایسے میں مجھے بڑی...

مکمل تحریر پڑھیں

غائب ہونا

تم غائب نہیں ہو سکتے اُس نے میری طرف دیکھ کر مُسکراتے ہوئے کہا ۔ بلکہ مجھے حیرت ہے کہ تم جیسا شخص ایسی بیوقوفانہ اور خیالی بات کس طرح کر سکتا ہے ۔ میں کیوں غائب نہیں ہو سکتا ؟ کیا تم سنجیدہ ہو ؟ بلکل سنجیدہ ہوں ، تم سمجھاو کہ میں کیوں...

مکمل تحریر پڑھیں

قتل

http://www.flickr.com/photos/miss_h/3603482742/

اُس نے دائیں ہاتھ سے مُکا بنایا ، اور بائیں ہتھیلی پر اس زور سے مارا کے اس سے پیدا ہونے والی آواز سے ہمارے ساتھ والی میز پر بیٹھا جوڑا جو کیفے میں بھی سرگوشیوں میں مصروف تھا ، کچھ پریشان سا دکھائی دیا ۔ دو تین دفعہ اپنی ہتھیلی پر مُکا مارنے کے...

مکمل تحریر پڑھیں

کچھ تصاویرِ نوٹس کچھ کتابوں میں خطوط

  کافی دن سے بہت کچھ لکھنے کا سوچتا ہوں ، لیکن پھر چھوڑ دیتا ہوں ، میرا خیال تھا کہ امتحانوں کے بعد موج مستی ہو گی ،  لیکن مستی تو کیا ادھر موج بھی نہیں رہی کہ بس بوجھ بوجھ ہی ہو گئی اپنی تو ۔ ہیں جی ، انسان کے بڑے بڑے...

مکمل تحریر پڑھیں

سمجھ بھی جاو!!!!۔

میں نے اپنی نگاہوں کو اپنے پاوں کے انگوٹھے پر مرکوز رکھا جو زمین پر پڑی مٹی کو رگڑ رہا تھا ۔ اُس نے میری طرف دیکھا اور کہا ، ٹامے ، اِدھر میری طرف دیکھ۔ میں نے اُس کی طرف دیکھا تو اُس نے اپنا مطالبہ بڑھا دیا اور گویا ہوا۔ ’’اوئے کنجر میری...

مکمل تحریر پڑھیں